سابق وزیر اعظم نواز شریف کی احتساب عدالت میں طلبی

اسلام آباد(یو این آئی) سابق پاکستانی وزیر اعظم نواز شریف کو پناما پیپرز کیس کے سپریم کورٹ کے فیصلے کی ہدایات کے مطابق احتساب عدالت نے 19 ستمبر کو طلب کرلیا ہے۔قومی احتساب بیورو (نیب) کی جانب سے دائر ریفرنس کے حوالے سے یہ قدم اٹھایا گیا ہے۔ پاکستانی میڈیا کے مطابق مسٹر شریف کو فلیگ شپ ریفرنس میں سمن جاری کیا گیا ہے۔
یہ بیرون پاکستان قائم کردہ 16 کمپنیوں سے متعلق ریفرنس ہے۔ احتساب عدالت نے نواز شریف اور ان کے بیٹوں حسن اور حسین نواز کے خلاف آف شور کمپنیوں کی ملکیت کے حوالے سے دائر کیا گیا صرف ایک ریفرنس منظور کیا تھا۔ چار ریفرنسز میں سے 3 نیب ریفرنسز واپس کردیئے تھے۔سمن راولپنڈی کی احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے جاری کیا ہے۔
روزنامہ ڈان کی رپورٹ میں بتا یا گیا ہے کہ اس ریفرنس کے مطابق سابق وزیراعظم کے بچے حسن نواز، حسین نواز اور مریم صفدر بھی مذکورہ کمپنیوں میں اسٹیک ہولڈر ہیں۔ واپس کیے جانیوالے ریفرنسز میں لندن کی ایون فیلڈ جائدادوں، جدہ کی عزیزیہ اسٹیل ملز اور موجودہ وزیر خزانہ اسحٰق ڈار کے خلاف ا?مدن سے زائد اثاثہ جات بنانے کے حوالے سے دائر کیے گئے ریفرنسز شامل تھے۔

Title: accountability court summons sharif sons on sept 19 | In Category: پاکستان  ( pakistan )