احمدیوں کے خلاف نواز شریف کے داماد کیپٹن صفدر کا بیان افسوس ناک:پاکستانی وزیر داخلہ

اسلام آباد: پاکستان کے معزول وزیر اعظم نواز شریف کے داماد محمد صفدر کے پارلیمنٹ میں اقلیتی احمدی فرقہ کے بارے میں دیئے گئے منافرت پھیلانے والے بیان پر اگرچہ شریف خاندان اور نواز شریف کی پاکستان مسلم لیگ نواز کی خاموشی کے درمیان پاکستان کے وزیر داخلہ اور پی این ایل (ن) کے سینئر لیڈر احسان اقبال نے کیپٹن صفدر کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے ان کے قومی اسمبلی میں دیے گئے بیان کو افسوسناک قرار دیا ۔
نیوز انٹرنیشنل کی جانب سے شائع کردہ ایک رپورٹ کے مطابق، پاکستان کے وزیر داخلہ نے کہا کہ قومی اسمبلی میں اس طرح کے نفرت انگیز بیانات کو سنناواقعی افسوسناک ہے اور ہم اکثریت والے پاکستان میں یقین رکھتے ہیں اور ملک کی تمام اقلیتوں کا احترام کر تے ہیں۔ معزول وزیر اعظم کے داماد (ریٹائرڈ) کیپٹن صفدر احمدی فرقہ پر دیئے گئے اپنے بیان کے سلسلے میں تنقید کا سامناکر رہے ہیں اور سوشل میڈیا پر بھی انہیں لوگوں نے نشانہ بنایا ہے۔
کیپٹن صفدر نے منگل کے روز قومی نیشنل اسمبلی میں کہا کہ یہ لوگ (احمدی) ملک کے آئین اور نظریات کے لئے خطرہ ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ احمدی فرقہ کے لوگوں کی مسلح افواج میں تقرری کو روکنے کے لئے اسمبلی میں ایک تجویز پیش کرنا چاہتے ہیں۔صفدر کے بیان کے بعد سوشل میڈیا کے روسط سے بھی شدید ردعمل ظاہر کیا جانے لگا۔
یہاں تک کہا گیا ہے کہ صفدر کے بیان پر شیرف خاندان اور پاکستان مسلم لیگ نواز کے بیشتر لیڈروں کی خاموشی صفدر کے بیان کی تائید کرتی محسوس ہوتی ہے۔سوشل میڈیا میں یہ بھی کہا یا کہ اگر اس بیان پر کوئی فساد برپا ہوا اور کسی ایک کی بھی جان گئی تو اس کا خون کیپٹن صفدر کی گردن پر ہوگا۔واضح رہے کہ ابھی تک نواز شریف یا ان کی پارٹی کی جانب سے باقاعدہ ایسا کوئی باینجاری نہیں کیا گیا جس میں کیپٹن صفدر کے بیان کی مذمت کی گئی ہو۔

Title: captain safdar comes under fire over statements regarding ahmadi community | In Category: پاکستان  ( pakistan )